امت مسلمہ كے خدشات درست ثابت ہوئے/ بن سلمان نے جعلي اسرائيلي رياست كو تسليم كرليا

تاریخ اشاعت:16/01/1397
بن سلمان نے فلسطينيوں كي سترسالہ جدوجہد سے غداري كرتے ہوئے اٹلانٹك نامي امريكي جريدے كو انٹرويو ديتے ہوئے كہا كہ اسرائيليوں كو بھي اپني مستقل سرزمين ركھنے كا حق حاصل ہے/ سعودي عرب كے يہودي رياست كے ساتھ مشتركہ مفادات ہيں۔
جاثيہ نيوز كے مطابق، سعودي وليعہد نے كہا ہے كہ سعودي عرب اور اسرائيل كے درميان بہت سارے مشتركہ مفادات موجود ہيں اور اگر امن قائم ہو جائے تو اسرائيل اور خليجي عرب ممالك كے درميان روابط ميں استحكام آ سكتا ہے۔
محمد بن سلمان نے اس انٹرويو ميں مزيد كہا كہ اسرائيليوں كو بھي اپني مستقل سرزمين ركھنے كا حق حاصل ہے جس ميں وہ پرامن طريقے سے زندگي بسر كر سكيں۔
پير كے روز شائع ہونے والے امريكي جريدے دي اٹلانٹك ميں سعودي شہزادے نے اس بات كا اعتراف كيا ہے كہ سعودي عرب اور اسرائيل كے درميان تعلقات بتدريج بہتري كي طرف جا رہے ہيں۔
بن سلمان سے پوچھے گئے اس سوال كے جواب ميں كہ كيا يہوديوں كو ايك مستقل جگہ پر جينے اور اپنا ملك بنانے كا حق حاصل نہيں ہے؟ كہا: فلسطينيوں اور اسرائيليوں دونوں كو اپني اپني سرزمين ركھنے كا حق حاصل ہے ليكن ان دونوں ملكوں كو چاہيے كہ ايك پرامن معاہدے پر اتفاق كر ليں جس سے علاقے ميں استحكام پيدا ہو اور باہمي تعلقات بھي معمول پر آئيں۔
سعودي وليعہد كا اپنے انٹرويو كے دوران مزيد كہنا تھا كہ ان كي كسي قوم كے ساتھ كوئي لڑائي نہيں ہے بلكہ ان كے تمام خدشات يروشلم ميں واقع مسجد الاقصيٰ كے مستقبل اور فلسطيني عوام كے حقوق سے متعلق ہيں۔ اس كے علاوہ ہميں اسرائيل سے كوئي مشكل نہيں ہے۔
انہوں نے اس بات پر تاكيد كرتے ہوئے كہ ہمارا يہوديوں سے كوئي جھگڑا نہيں ہے كہا: ہمارے اور اسرائيل كے ساتھ مشتركہ مفادات ہيں اور اگر امن حاصل ہو جاتا ہے تو اسرائيل اور خليج تعاون كونسل كے ركن ملكوں جيسے مصر اور اردن كے ساتھ بہت سارے مشتركہ مفادات حاصل ہوں گے۔
حاليہ برسوں كے دوران سعودي عرب كے اسرائيل كے ساتھ بڑھتے تعلقات كي خبريں سامنے آ رہي تھي ليكن سعودي وليعہد محمد بن سلمان نے اقتدار كي كرسي سنبھالتے ہي ان تعلقات ميں مزيد استحكام پيدا كر ديا ہے۔ انہوں نے گزشتہ ماہ اسرائيلي پروازوں كے ليے اپني فضائي حدود كھول كر يہوديوں كے دل خوش كر دئے اور صہيوني رياست نے بھي بڑي گرم جوشي سے ان كے اس اقدام كا خير مقدم كيا۔
گزشتہ سال نومبر كے مہينے ميں اسرائيل كابينہ كے ايك وزير نے اسرائيل كے سعوديہ كے ساتھ خفيہ روابط كا پردہ چاك كرتے ہوئے كہا تھا كہ اسرائيل كے سعودي اعليٰ حكام سے گہرے اور قريبي تعلقات ہيں۔
خيال رہے كہ سعودي شہزادہ بن سلمان جو حاليہ دنوں طويل امريكي دورے پر ہيں نے امريكہ ميں يہودي لابي سرغنوں سے ملاقاتيں كي ہيں جبكہ امريكي صدر ڈونلڈ ٹرمپ كے داماد كوشنر سے ملاقات كے دوران امريكي مجوزہ امن منصوبہ ’’صدي كي ڈيل‘‘ كے حوالے سے بھي بات چيت كي ہے۔
دن كي تصوير
وادي السلام نجف   
ويڈيو بينك