امريكي صدر برطانوي وزيراعظم اور فرانسيسي صدر مجرم ہيں

تاریخ اشاعت:21/02/1397
رہبرانقلاب اسلامي نے شام پر امريكا اور اس كے اتحاديوں كے حملے كو مجرمانہ قرارديتے ہوئے فرمايا كہ ماضي كي طرح اس بار بھي علاقے ميں امريكا كو يقيني طور پر شكست ہوگي اور ہم كھل كر اعلان كرتے ہيں كہ امريكي صدر برطانوي وزير اعظم اور فرانسيسي صدر مجرم ہيں۔
رہبرانقلاب اسلامي آيت اللہ العظمي سيد علي خامنہ اي نے شام پر ہفتے كي صبح امريكا برطانيہ اور فرانس كے حملے كو سنگين جرم قرارديا اور كيميائي ہتھياروں كے استعمال كي مخالفت پر مبني ان ملكوں كے دعوؤں كو جھوٹ كا پلندہ بتاتے ہوئے فرمايا كہ اسلامي جمہوريہ ايران ماضي كي طرح استقامتي گروہوں كے شانہ بشانہ كھڑا رہے گا اور اس بار بھي امريكا علاقے ميں اپنے مقاصد حاصل نہيں كر پائےگا۔
عيد مبعث كے موقع پر اسلامي جمہوريہ ايران كے اعلي حكام اور تہران ميں متعين اسلامي ملكوں كے سفيروں نے ہفتے كو رہبرانقلاب اسلامي آيت اللہ العظمي سيد علي خامنہ اي سے ملاقات كي۔
اس ملاقات ميں رہبرانقلاب اسلامي نے فرمايا كہ سنيچر كو شام پر كيا گيا حملہ مجرمانہ اقدام ہے اور ميں كھل كر يہ اعلان كرتا ہوں كہ امريكي صدر، برطانوي وزيراعظم اور فرانسيسي صدر مجرم ہيں۔
آپ نے فرمايا كہ اس حملے سے امريكيوں كے لئے كوئي نتيجہ نہيں نكلے گا اور نہ ہي انہيں كوئي فائدہ ہوگا، بالكل اسي طرح جس طرح سے عراق اور افغانستان ميں انہيں كچھ حاصل نہيں ہوا۔
رہبرانقلاب اسلامي نے امريكا اور بعض مغربي ملكوں كے اقدامات كو ان كے سامراجي اہداف اور بين الاقوامي آمريت كا نتيجہ قرارديا اور فرمايا كہ البتہ آمروں اور ڈكٹيٹروں كو دنيا ميں كہيں بھي كاميابي نصيب نہيں ہوگي اور امريكا كو بھي علاقے ميں يقيني طور پر شكست كا منہ ديكھنا پڑے گا۔
رہبرانقلاب اسلامي نے فرمايا كہ امريكيوں كا نشانہ صرف شام، عراق اور افغانستان نہيں بلكہ وہ امت اسلاميہ اور اسلام كو نشانہ بنانا چاہتے ہيں اس لئے اسلامي حكومتوں كو چاہئے كہ وہ امريكا اور بعض مغربي ملكوں كے اہداف كي تكميل ميں ان كا ساتھ نہ ديں اوران كي خدمت نہ كريں۔
رہبرانقلاب اسلامي نے فرمايا كہ شام اور مغربي ايشيا كے علاقے ميں ايران كي موجودگي كي وجہ اس استقامتي محاذ كي مدد كرنا تھي جو ظلم كے مقابلے ميں تھا اور استقامتي محاذ نے بھي شامي فوج كي شجاعت و بہادري كي بدولت ان دہشت گردوں كو شكست دي جنھيں امريكا، مغربي ملكوں اور سعودي عرب جيسے ان كے ايجنٹوں نے تيار كيا تھا۔
رہبرانقلاب اسلامي نے فرمايا كہ جو لوگ كل كھلے عام اور پس پردہ داعش كي حمايت كررہے تھے آج وہي داعش كا مقابلہ كرنے كا دعوي كررہے ہيں اور يہ كہہ رہے ہيں كہ انہوں نے داعش كو شكست دي ہے، يہ سب جھوٹ ہے۔ آپ نے فرمايا كہ ان ملكوں نے داعش كے خلاف جنگ ميں كچھ بھي نہيں كيا ہے۔
رہبرانقلاب اسلامي نے داعش كو شكست دينے كے بارے ميں امريكي صدر ٹرمپ كے تازہ ترين دعوے كو جھوٹا اور شرمناك قرارديا اور فرمايا كہ امريكيوں سے جتنا ہوسكتا تھا انہوں نے داعش كي مدد كي ہے اور اگر كہيں داعش كے عناصر كا محاصرہ كرليا جاتا تھا تو امريكيوں نے ہي انہيں وہاں سے باہر نكالنے ميں مدد كي ہے كيونكہ داعش كو امريكيوں نے ہي بنايا تھا۔
آپ نے فرمايا كہ امريكيوں نے سعوديوں اور سعوديوں جيسے ديگر عناصر كے پيسوں سے داعش كو تشكيل ديا اور پھر انہيں عراق اور شام كے عوام كا خون بہانے كے لئے وہاں بھيجا ليكن استقامتي محاذ نے امريكا اور امريكي ايجنٹوں كا ڈٹ كر مقابلہ كيا اور ان دونوں ملكوں كو نجات دلائي اور اس كے بعد بھي ايسا ہي ہوگا۔
آيت اللہ العظمي سيد علي خامنہ اي نے اس بات پر زور ديتے ہوئے كہ جہاں بھي كسي مظلوم كو مدد كي ضرورت ہوگي اسلامي جمہوريہ ايران وہاں موجود ہوگا اور مسئلہ فلسطين ميں فلسطينيوں كي حمايت كے تعلق سے اسلامي جمہوريہ ايران كے اصرار كا فلسفہ بھي يہي ہے فرمايا كہ فلسطيني قوم اپني استقامت و پامردي كي بدولت آج ايك طاقتور قوم ميں تبديل ہوچكي ہے اور بلاشبہہ فلسطيني عوام صيہونيوں پر غالب ہوں گے اور سرزمين فلسطين ، فلسطيني قوم كو واپس مل كر رہے گي۔
رہبرانقلاب اسلامي نے امريكي صدركے اس بيان كا حوالہ ديتے ہوئے كہ امريكا نے مغربي ايشيا ميں سات ٹريلين ڈالر خرچ كئے ليكن اسے كچھ بھي ہاتھ نہيں لگا فرمايا كہ اس كے بعد بھي امريكا جتنا چاہے خرچ كرلے علاقے ميں اس كو كچھ بھي ہاتھ نہيں لگے گا۔
دن كي تصوير
حرم امام رضا عليہ السلام   
ويڈيو بينك